لاہور کی ایک عدالت نے گلوکارہ میشا شفیع کے ایک بار پھر قابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کر دیے ہیں جس میں گلوکار اور اداکار علی ظفر کے خلاف مبینہ طور پر بدتمیزی کی مہم چلانے کے الزام میں ان کے اور دیگر کے خلاف دائر کیا گیا ہے۔

جوڈیشل مجسٹریٹ غلام مرتضیٰ نے شفیع کی جانب سے اپنے وکیل کے ذریعے آج کی سماعت میں ذاتی طور پر حاضری سے استثنیٰ کی درخواست مسترد کرتے ہوئے انہیں 50,000 روپے کے قابل ضمانت وارنٹ کے ذریعے طلب کر لیا۔

ملزمان عفت عمر، سید فیضان رضا، حسیم الزمان، فریحہ ایوب، علی گل پیر اور لینا غنی عدالت میں پیش ہوئے۔ کیس کی سماعت 19 فروری تک ملتوی کر دی گئی۔

ایف آئی اے پہلے ہی کیس کا چالان عدالت میں جمع کرا چکی ہے۔ چارج شیٹ میں کہا گیا کہ محترمہ شفیع نے 19 اپریل 2018 کو علی ظفر کے خلاف جنسی طور پر ہراساں کرنے کے ہتک آمیز اور جھوٹے الزامات لگائے لیکن وہ اپنے الزامات کو ثابت کرنے کے لیے ایف آئی اے کے سامنے کوئی گواہ پیش کرنے میں ناکام رہیں۔

خبر کا ذریعہ: جی این این

Leave a Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: