فنانشل ایکشن ٹاسک فورس (ایف اے ٹی ایف) نے پاکستان کو کم از کم جون 2022 تک پابندیوں کی گرے لسٹ میں برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

پیرس اجلاس کے اختتام پر جاری ہونے والے بیان سے ظاہر ہوتا ہے کہ پاکستان صرف دو اشیاء کی تعمیل میں ناکام ی کے ذریعے ہدف سے بالبال محروم رہا ہے۔

مکمل اجلاس میں دو اقدامات کے منصوبوں کی باقی پانچ اشیاء پر پاکستان کی پیش رفت کا جائزہ لیا گیا۔

ان میں سے چار اشیاء اینٹی منی لانڈرنگ (اے ایم ایل) اور ایک دہشت گردی کی مالی معاونت سے نمٹنے کے بارے میں ہیں (سی ایف ٹی)

ایف اے ٹی ایف نے پاکستان کو بقیہ ایکشن آئٹمز کی تعمیل کے لئے چار ماہ کا وقت دیا ہے۔اس وقت تک ملک گرے لسٹ میں رہے گا۔

Leave a Reply

Your email address will not be published.

%d bloggers like this: