تمباکو نوشی کا عالمی دن آج منایا جا رہا ہے۔

تمباکو نوشی سے ہونے والے نقصانات اور صحت اور ماحولیات پر اس کے مضر اثرات سے آگاہی کے لیے (آج) منگل کو تمباکو نوشی کا عالمی دن منایا جا رہا ہے۔

اس سال اس دن کا تھیم ’’تمباکو سے ہمارے ماحول کو خطرہ‘‘ ہے۔

سرکاری، غیر سرکاری اور کمیونٹی پر مبنی تنظیموں نے ملک کے مختلف شہروں اور قصبوں میں اپنی آگاہی مہم کے حصے کے طور پر میٹنگز، سیمینارز، ویبینرز، ریلیوں اور پوسٹرز اور بینرز آویزاں کیے ہیں۔

تمباکو کا استعمال ہر سال دنیا بھر میں 80 لاکھ سے زیادہ افراد کی جان لے لیتا ہے۔ انسانی قیمت کے ساتھ ساتھ تمباکو کا استعمال بھی ماحول کو خراب کرنے کا سبب بنتا ہے۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن (ڈبلیو ایچ او) کے رکن ممالک نے 31 مئی کو 1987 میں تمباکو نوشی کا عالمی دن منانے پر اتفاق کیا۔ تب سے ہر سال یہ دن ایک متعلقہ تھیم کے ساتھ منایا جاتا ہے۔

ڈبلیو ایچ او کے مطابق، “ماحول پر تمباکو کی صنعت کا نقصان دہ اثر وسیع اور بڑھ رہا ہے جس سے ہمارے سیارے کے پہلے سے ہی نایاب وسائل اور نازک ماحولیاتی نظام پر غیر ضروری دباؤ بڑھ رہا ہے”۔

gr

%d bloggers like this: